father-sacrifice-quote-father-respect-quotes-walid-ka-maqam
father-sacrifice-quote-father-respect-quotes-walid-ka-maqam 

  ایک بوڑھے باپ اور جوان بیٹے کا واقعہ .

ایک دفعہ کا واقعہ ہے کہ ایک بوڑھے باپ اپنےجوان  بیٹے کے ساتھ ایک پہاڑی پر گیا اور پہاڑی کی چوٹی پر ایک جگہ باپ بیٹھ گیا ۔

بوڑھے باپ نے اپنے جوان بیٹے سے کہا بیٹا ایک مالٹا دو 

 بیٹے نے مالٹا دیا باپ نے وہ مالٹا لے کر پہاڑی سے نیچے پھیک دیا.

 بیٹا حیراں ابا جان نے یہ کیا کام کر دیا ہے پھر بھی خاموش رہا 

   پھر والد صاحب نے بیٹے سے کہا

 بیٹا جاٶ مالٹا تو اٹھا کر لیے آٶ

 بیٹا پہاڑی سے نیچے اترا اور مالٹا ڈھونڈ کر لایا اور والدصاحب کو وہ مالٹا دیا.

والد صاحب نےدوسری بار بیٹے سے  مالٹا لیے کر پہاڑی سے نیچیے پھیک دیا اور کہا بیٹا نیچے جاکر مالٹا تو لیے آٶ  بیٹا پھر پہاڑی سے نیچے اترا مالٹا ڈھونڈ کر لایا اور والد صاحب کو دیا.

والد صاحب نے تیسری بار پھر بیٹے سے مالٹا  لے کر پہاڑی سے نیچے پھیک دیا اور کہا بیٹا جاٶ اور مالٹا اٹھا کر لے آٶ اب بیٹے غصہ بھی آرہا تھا پر غصہ کو قابو کیا اور چلا گیا

پہاڑی سے نیچے اترا مالٹا اٹھایا واپس آیا اور والد صاحب کو مالٹا دیا تو 

جسے ہی والد صاحب دوبارہ چوتھی مرتبہ مالٹا پھیکنے لگے

تو بیٹے نے کہا ابا جان یہ آپ کیا کر رہے ہیں

  پہلی دفعہ آپ نے مالٹا پھیکہ آپ نے کہا جاٶ نیچے سے مالٹا اٹھا کر لے آٶ میں جاکر لے آیا تھا

 دوسری دفعہ بھی آپ نے ایسا ہی کیا  مالٹا پھیک کہا جاٶا لے آٶ میں لے آیا تھا 

تیسری دفعہ بھی آپ نے ایسا کیا  

بس اب  میں چوتھی مرتبہ نہیں جاٶں گا میں تھک چکا ہوں

 پہاڑی سے نیچےاترنا مالٹا ڈھونڈنا پھر واپس دوبارہ پہاڑی کے 

 اپر چڑھنا پھر نیچے جانا پھر واپس آنا 

 میری ٹانگیں تھک چکی ہیں اب  بس بھی کریں 

پھر بوڑھے باپ نے ایک تاریخی جملہ کہا 

بیٹا جب تم چھوٹے تھے تو میں تمہیں اسی پہاڑی پر لیا تھا 

تمہارے پاس ایک گیند تھی  

تم نےاس گیند کو دس 10 بار  پہاڑی سے نیچے پھیکہ تھا 

اور میں دس 10 بار نیچے گیا تھا گیند  اٹھا کر لیا تھا 

جب بھی تم گیند نیچے پھیکتے میں ہر بار جاتا اور واپس آکر 

 تمہیں گیند دیتا اور تم سے پیار کرتا پیار سے پیش آتا پھر تم خوش ہوتے تمہیں دیکھ کر میرے دل کو بھی خوشی ہوتی تھی

 باپ ، باپ ہوتا ہے اس کا ایک مقام ہے مرتبہ ہے 

اس واقعہ سے ہمہیں یہ سبق ملتا ہے کے 

والدیں اپنے بچوں کی خوشیوں کے لیے بہت قربانیاں دیتں ہیں 

اللہ ہم سب کو اپنے والدیں کی قدر کرنے کی توفیق دے آمین 

اور جن کے نہیں ہیں ان کی بخشش کے لیے دعاٸیں کرٸیں